عید اور ماں کی یاد - Tibb4all

عید اور ماں کی یاد


عید اور ماں کی یاد
آج پھر میری ماں یاد آرہی ہے
آدمی کتنا بھی بڑا ہوجائے۔
کتنے بھی عہدے مل جائیں۔
کتنی ہی عزت و شہرت مل جائے۔
کتنی ہی دولت مل جائے۔
ہاں عید کے موقع پر ماں باپ تو پھر بھی یاد آتے ہیں
بچپنا پھر سے لوٹ آتا ہے۔
آج وسائل کی کمی نہیں۔
لیکن مجھے آج بھی وہی روپیہ دوروپے یاد آتے ہیں
جن کے لئے میں ماں سے جھگڑا کرتا تھا۔
مجھے وہ دھلا ہوا لباس یاد آتا ہے
 جسے دوسری مرتبہ صندوق سے نکال کر عید کے لئے زیب تن کرتا تھا
آج پھر مجھے والد کی انگلی پکڑ کر عید کی طرف جانا یاد آرہا ہے
آج پھر مجھے میری ماں کا بار باراسرار کرکےپرانے جوتے پہنانا یاد آرہا ہے
آج پھر مجھے میرے والدین یاد آرہے ہیں
اللہ انہیں کروٹ کروٹ جنت نصیب فرمائے۔۔آمین

عید اور ماں کی یاد عید اور ماں کی یاد Reviewed by tibb4all on August 01, 2020 Rating: 5

No comments:

Powered by Blogger.